سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(139) جب نمازی یہ محسوس کرے کہ کوئی چیز خارج ہوئی ہے تو۔۔۔۔؟

  • 7504
  • تاریخ اشاعت : 2013-11-01
  • مشاہدات : 360

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

جب میں نماز کے لئے وضو کرتا ہوں تودوران وضو یوں محسوس ہوتا ہے کہ عضو تناسل سے کوئی چیز نکل رہی ہےتوکیا اس کے یہ معنی ہیں کہ میں ناپاک ہوگیا ہوں یا نہیں؟اگرمیں نماز پڑھتے ہوئے اس طرح محسوس کروں تواس سےمیری نماز باطل ہوجائے گی یا نہیں؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

نمازی کے یہ محسوس کرنے سے کہ اس کی دبر یا قبل سے کوئی چیز خارج ہوئی ہےوضو باطل نہیں ہوتا،لہذا اس کی طرف التفات نہیں کیا جائے گا کیونکہ یہ شیطانی وسوسہ ہے۔نبی کریمﷺسے اس طرح کی صورت حال کے بارے میں سوال کیا گیا توآپؐ نے فرمایا کہ ‘‘اس وقت تک نماز نہ توڑے جب تک آواز نہ سن لے یا بدبومحسوس نہ کرے۔’’ (متفق علیہ)

 

مقالات وفتاویٰ ابن باز

صفحہ 247

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ