سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(420) گائے وغیرہ ادھیارے دیتے ہیں جائز ہے یا نہیں؟

  • 7035
  • تاریخ اشاعت : 2013-10-08
  • مشاہدات : 334

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

گائے وغیرہ ادھیارے دیتے ہیں جائز ہے یا نہیں؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته

الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

جائز ہے منع کی کوئی دلیل نہیں،  (۳۱مارچ ۱۹۱۶ء؁)

تشریح:۔

 کیا فرماتے ہیں علماء دین اس مسئلہ میں منگالہ میں دستور ہے کہ بچھڑا خرید کے دوسرے کو دے دیتے ہیں ، جب وہ بڑا ہو جاتا ہے تو خریدنے والا اس کو بیچ کر پوری قیمت کے دو حصے کرکے ایک حصہ خود اور ایک حصہ پالنے ؤالے کو ، یا بعد اصل قیمت کے ایک حصہ خود لیتے ہیں اور ایک حصہ پالنے والے کو دیتے ہیں پس یا جائز ہے یا نہیں؟

الجواب :۔  معاملہ مذکورہ جائز ہے ، کیوں کہ یہ منجملہ صور شرکت کہ ہیں اور شرکت کا جواز نصوص کثیر سے ثابت ہے ،

عن ابی هريرۃرضي الله تعالي عنه مر فو عاً قال الله تعالیٰ اناثالث الثريکين الحديث اخرجه (ابوداؤد)

اور کوئی وجہ اس کی ممانعت کی پائی جاتی ، ونیز

حديث المسلمون علی شهر و طهم الحد يث اخرجه (الترمذی وغيرها)

 اس کی صحت و جواز پر وال ہے اللہ اعلم،  (سید محمد نذیر حسین ) 

  ھذا ما عندي والله أعلم بالصواب

فتاویٰ ثنائیہ امرتسری

 

جلد 2 ص 402

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ