سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(469) ایک ناجائز بیع

  • 7022
  • تاریخ اشاعت : 2013-10-06
  • مشاہدات : 226

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته
زید نے اپنا مکان اپنے چچا عمر کو ہبہ کر دیا اور قبضہ مالکا نہ بھی دے دیا عرصہ آٹھ سال کے بعد عمر، (موہوب) نے بحق خالد بیع رجسٹری کر دیا اس کے بعد زید نے بھی مکان موہونہ کسی اور کے حق میں بیع کر دیا ، ازروئے شرع شریف مکان مو ہوبہ کا مالک زید ہے یا عمر ؟ اور کس کی بیع صحیح ہوئی ؟

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

زید نے اپنا مکان اپنے چچا عمر کو ہبہ کر دیا اور قبضہ مالکا نہ بھی دے دیا عرصہ آٹھ سال کے بعد عمر، (موہوب) نے بحق خالد بیع رجسٹری کر دیا اس کے بعد زید نے بھی مکان موہونہ کسی اور کے حق میں بیع کر دیا ، ازروئے شرع شریف مکان مو ہوبہ کا مالک زید ہے یا عمر ؟ اور کس کی بیع صحیح ہوئی ؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

مکان کا مالک مو ہو بہ ہے جب کہ وہ با قبضہ ما لک بھی ہو چکا ہے اب واہب کو کوئی اختیا ر نہیں کہ اس مکان کو بیع وغیرہ کرے اور نہ ہی واپس لے سکتا ہے حدیث میں آیا ہے کہ ہبہ کو واپس لینے والا کتے کی طرح بے جوقے کر کے کھا لیتا ہے ، والله اعلم.

 (اہلحد یث امرت سر ۱۵نومبر۱۹۳۵؁ء)

فتاویٰ ثنائیہ

جلد 2 ص 392

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ