سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(643) بیت اللہ شریف کا طواف بت پرستی ہے؟

  • 6441
  • تاریخ اشاعت : 2013-08-12
  • مشاہدات : 843

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

غیر مسلم کہتے ہیں کہ مسلمان بھی غیر مسلموں  کی طرح بت پرستی کر رہے ہیں۔  مثلا بیت اللہ شریف کی طرف منہ کرکے عبادت کرنی یا حجر اسود کو بوسہ دینا۔

ہم لوگوں نے ان کو جواب دیا ۔

لَّيْسَ الْبِرَّ أَن تُوَلُّوا وُجُوهَكُمْ قِبَلَ الْمَشْرِقِ یا   وَلِكُلٍّ وِجْهَةٌ هُوَ مُوَلِّيهَا﴿١٧٧سورة البقرة

یا حجر اسود کو ہم نفع نقصان کا مالک نہیں سمجھتے۔ صرف اپنے نبی کریمﷺ کی پیروری کرتے ہیں۔ اس پر وہ اعتراض کرتے ہیں کہ ہم بھی اپنے بزرگوں کی پیروی کرتے ہیں۔  گویا ہم بھی ان کو نفع نقصان کا  مالک نہیں سمجھتے۔


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته

الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

مسئلے کی تحقیق کےلئے پہلے یہ دیکھنا ہے۔ کہ مسلمان کعبہ اور حجراسود کی طرف منہ کر کے کیا کہتے ہیں۔ اور کیا پڑھتے ہیں۔ بت پرست اپنی حاجات پرارتھنا ان بتوں سے کرتے ہیں۔ اور مسلمان کہتے ہیں۔ سبحان اللہ والحمدللہ خدا کے نام کی پاکی  بیان کرتے ہیں۔ پس ان دونوں میں فرق نمایاں ہے۔  اگر مسلمان بھی کعبہ کی عبادت کرتے یا حجر اسود کی عبادت کرتے تو ساری نماز میں کوئی لفظ توکعبہ کو مخاطب کرکے کہتےاے کعبے تو ہماری مدد کر حالانکہ بت پرست بتوں سے پرارتھنا اوروعجزونیاز کرتے ہیں۔ 

 ھذا ما عندي والله أعلم بالصواب

فتاویٰ  ثنائیہ امرتسری

جلد 01 ص 798

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ