سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(168) اذان و اقامت میں شہادت کے وقت انگلی اٹھانا

  • 64
  • تاریخ اشاعت : 2011-10-13
  • مشاہدات : 659

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته
ہمارے معاشرے میں، میں نے ایک بات دیکھی ہے کہ جب کبھی بھی اذان ،اقامت ، یا ایسے ہی أشهد أن لا اله إلا الله پڑھا جاتا ہے  تو لوگ اپنی شہادت کی انگلی کو اٹھاتے ہے جیسا کہ نماز میں کیا جاتا ہے، کیا یہ عمل درست ہے؟ یا بدعت ہے؟

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

ہمارے معاشرے میں، میں نے ایک بات دیکھی ہے کہ جب کبھی بھی اذان ،اقامت ، یا ایسے ہی أشهد أن لا اله إلا الله پڑھا جاتا ہے  تو لوگ اپنی شہادت کی انگلی کو اٹھاتے ہے جیسا کہ نماز میں کیا جاتا ہے، کیا یہ عمل درست ہے؟ یا بدعت ہے؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

ایسا عمل سنت سے ثابت نہیں ہے لہذا درست نہیں ہے،اور بدعت میں شمار ہو گا۔

ھذا ما عندی  واللہ اعلم بالصواب

فتاویٰ علمائے حدیث

جلد 2 کتاب الصلوۃ


ماخذ:مستند کتب فتاویٰ