سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(763) داڑھی بڑھانا اور مونچھیں پست کرنا

  • 5131
  • تاریخ اشاعت : 2013-06-29
  • مشاہدات : 586

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

اَرَئَ یْتَ مَنِ اتَّخَذَ اِلٰھَہٗ ھَوٰہُ} (پارہ نمبر ۱۹ سورۂ فرقان آیت نمبر ۴۳) ایک مسلمان تک یہ دعوت پہنچ جاتی ہے کہ داڑھی بڑھانا اور مونچھیں پست کرنا رسول اللہ  صلی الله علیہ وسلم کا حکم ہے پھر بھی وہ داڑھی نہیں بڑھاتا اپنی خواہش کی پیروی کرتا ہے تو کیا اس آیت کی رو سے اس نے شرک کیا ہے؟     (محمد یونس شاکر،نوشہرہ ورکاں)


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

اگر واقعی اس نے اپنی ہوٰی و خواہش کو الٰہ بنا رکھا ہے تو وہ شرک کا مرتکب ہوا ہے۔ اور اگر اس نے ہوٰی و خواہش کو الٰہ تو نہیں بنایا مگر کسی وقت خواہش سے مغلوب ہوکر داڑھی کٹاتا یا منڈاتا ہے یا کسی اور گناہ کا ارتکاب کرتا ہے بشرطیکہ وہ گناہ شرک نہ ہو تو وہ مجرم و گناہ گار ضرور ہے شرک کا مرتکب نہیں۔           ۳۰ ؍ ۴ ؍ ۱۴۲۴ھ

 

قرآن وحدیث کی روشنی میں احکام ومسائل

جلد 02 ص 751

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ