سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(670) یا کوئی کسی دوسرے کا عقیقہ کر سکتا ہے جیسے چچا..الخ

  • 5037
  • تاریخ اشاعت : 2013-06-28
  • مشاہدات : 541

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

کیا کوئی کسی دوسرے کا عقیقہ کر سکتا ہے جیسے چچا بھتیجے کا نانا نواسے کا یا صرف والدین پر ہی ضروری ہے ، نیز کوئی اپنا عقیقہ خود کر سکتا ہے اگر نہ بھی کرے تو اس میں گناہ گار تو نہیں ہو گا۔             (عبدالستار، نارووال)


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

بچے کا عقیقہ والدین پر فرض ہے کوئی دوسرا بھی بچے کے والد کی طرف سے کر سکتا ہے ، رسول اللہ صلی الله علیہ وسلم  نے اپنے نواسے کا عقیقہ خود کر دیا تھا۔3                                              ۲۱؍۲؍۱۴۲۴ھ

 

قرآن وحدیث کی روشنی میں احکام ومسائل

جلد 02 ص 660

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ