سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(151) بعض لوگ عشاء کے فرضوں کے پہلے جو چار سنت ادا کرتے ہیں..الخ

  • 4582
  • تاریخ اشاعت : 2013-06-20
  • مشاہدات : 386

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

بعض لوگ عشاء کے فرضوں کے پہلے جو چار سنت ادا کرتے ہیں اور پھر یہ کہتے ہیں کہ جس نے چار سنت عشاء کے فرضوں سے پہلے ادا کیں اور تہجد ادا نہ کی تو بجائے تہجد کے یہ سنتیں ہو جاتی ہیں؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

عشاء سے پہلے چار رکعتیں نوافل ہیں مگر اتنی فضیلت کہ وہ تہجد کی نماز کے قائم مقام ہوسکتی ہیں کسی حدیث میں نظر سے نہیں گزرا۔ البتہ وتر کے بعد دو رکعت نوافل کے لیے حضور علیہ السلام نے فرمایا ہے کہ رات کو آدمی نہ اُٹھ سکے تو تہجد کے قائم مقام ہو جاتی ہیں۔

العلم عند اللہ مولانا ابو الوفاء ثناء اللہ صاحب امرتسری

(الاعتصام جلد ۱۸، ش ۹)

 

فتاویٰ علمائے حدیث

جلد 04 ص 240

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ