سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(145) میت کو لحد میں رکھ کر بجائے کچی اینٹوں کے لحد..الخ

  • 4335
  • تاریخ اشاعت : 2013-06-17
  • مشاہدات : 302

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

میت کو لحد میں رکھ کر بجائے کچی اینٹوں کے لحد کو مٹی کے پکے ہوئے برتنوں سے بند کرنا جائز ہے یا نہیں؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

چونکہ انسان کچی مٹی سے پیدا ہوا ہے اس لیے لحد میں اور قبر پر پختہ اینٹیں نہ لگائی جائیں۔ قرآن مجید میں ارشاد ہے۔

{مِنْھَا خَلَقْنَا کُمْ وَفِیْھَا نُعِیْدُکُمْ وَمِنْھَا نُخْرِجُکُمْ تَارَۃً اُخْرٰی}

’’یعنی ہم نے مٹی سے تمہیں پیدا کیا اور اسی میں تمہیں لوٹائیں گے، اور اسی سے تمہیں نکالیں گے۔‘‘

اسی لیے دفن کے وقت یہ آیت پڑھی جاتی ہے۔ پس لحد کو پکے برتنوں سے بند کرنا ناجائز ہے۔

(عبد اللہ امر تسری مقیم روپڑ) (فتاویٰ اہل حدیث جلد نمبر ۲ ص ۴۶۷)

 

فتاویٰ علمائے حدیث

جلد 05 ص 255

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ