سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(57) بکر غریب آدمی ہے۔اس نے زید سے مبلغ دس روپے نقد لئے.. الخ

  • 3156
  • تاریخ اشاعت : 2013-06-02
  • مشاہدات : 401

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

بکر غریب آدمی ہے۔اس نے زید سے مبلغ دس روپے نقد لئے۔اور ماہ جیٹھ کو ١٢ آثارپختہ چنے فی روپیہ کے حساب سے زیددینے کو مقرر کر لئے۔اگر بکر کے چنے بوجہ ژالہ باری بارش کے خراب  ہو جایئں تو زید نے مبلغ دس روپے اصل ماہ جیٹھ کو واپس لینے ہیں اورر شرط یہ ہے کہ بکر نے چنے زید کے گائوں میں جا کر دینے ہیں کیایہ جائز ہے۔؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

یہ صورت بیع سلم کی ہے۔یہ جائز ہے۔چنے نہ ملنے کی صورت میں اصل مال لے سکتا ہے۔حدیث شریف میں ہے۔

لا تاخذ الا سلمك اوراس مالك

 


فتاویٰ علمائے حدیث

جلد 14 ص 66

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ