سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(13) صرف پانی سے طہارت

  • 21353
  • تاریخ اشاعت : 2017-07-04
  • مشاہدات : 171

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

ایک شخص نے جنبی ہونے سے قبل سر میں تیل لگا رکھا تھا اب اس نے غسل کرنا ہے تو سر سے تیل نکالنے کے لئے اس کے پاس صابن یا کوئی ایسی شے نہیں جس سے تیل نکل جائے فقط پانی سے اس کے بال اور جسم طاہر ہو جائے گا؟ (جمیل۔ سی بلاک سبزہ زار لاہور)


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة الله وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

پاک و صاف پانی میں اللہ تعالیٰ نے یہ وصف رکھا ہے کہ وہ خود بھی پاک ہے اور پاک کرتا بھی ہے۔

ارشاد باری تعالٰی ہے:

﴿وَيُنَزِّلُ عَلَيكُم مِنَ السَّماءِ ماءً لِيُطَهِّرَكُم بِهِ ...﴿١١﴾... سورة الانفال

"اس نے تمہارے لئے آسمان سے پانی اتارا ہے تاکہ اس کے ساتھ تمہیں پاک کر دے۔"

اس آیت کریمہ سے معلوم ہوا کہ پانی میں پاک کرنے کی صلاحیت اللہ تعالیٰ نے رکھی ہے لہذا جنابت کی پلیدی دور کرنے کے لئے پانی کافی ہے۔ صابن، شیمپو وغیرہ ستھرائی اور طہارت کا باعث ہیں۔ نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم اور صحابہ کرام رضی اللہ عنھم سے غسل جنابت کے لئے پانی کا تذکرہ ہی ملتا ہے۔ اور اس پر کتاب و سنت اور اجماع امت دلالت کرتے ہیں کہ پانی بذات خود پاک ہے اور پاک کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔

ھذا ما عندی والله اعلم بالصواب

آپ کے مسائل اور ان کا حل

جلد3۔کتاب الطہارت-صفحہ75

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ