سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(482) شرط پوری ہونے پر طلاق ہو جائے گی..!

  • 1940
  • تاریخ اشاعت : 2012-09-03
  • مشاہدات : 780

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته
زید کا عمرو کے ساتھ کسی بات پر جھگڑا ہوا ۔ اور زید کی بیوی عمرو کی رشتہ دار ہے ۔ زید نے اپنی بیوی کو بولا اگر تو عمرو کے سامنے ہوئی تو تجھے طلاق۔ اگر شرط پوری ہو تو کیا شرعی رو سے طلاق ہو گی؟

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

زید کا عمرو کے ساتھ کسی بات پر جھگڑا ہوا ۔ اور زید کی بیوی عمرو کی رشتہ دار ہے ۔ زید نے اپنی بیوی کو بولا اگر تو عمرو کے سامنے ہوئی تو تجھے طلاق۔ اگر شرط پوری ہو تو کیا شرعی رو سے طلاق ہو گی؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!

الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

صورت مسئولہ میں  شرط پوری ہونے پر طلاق واقع ہو جائے گی زید کو چاہیے کہ وہ رجوع کر لے اگر عدت باقی ہو ورنہ نکاح جدید کرے اور آئندہ کے لیے ایسے نہ کرے۔

وباللہ التوفیق

احکام و مسائل

طلاق کے مسائل ج1ص 333

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ