سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(365) احرام باندھنے والی عورت کے سر سے بال ٹوٹ کر گر جائے تو اس کا حکم

  • 19213
  • تاریخ اشاعت : 2017-03-20
  • مشاہدات : 175

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

احرام باندھنے والی وہ عورت کیا کرے جس کے سرسے بال ٹوٹ کر  گر جائے؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!

الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

محرم،خواہ مرد ہو یا عورت،جب اس کے سر سے وضو میں مسح کے دوران یا غسل کے دوران کچھ بال ٹوٹ کر گر جائیں تو اس کو کوئی نقصان ن ہیں ہے،اور اسی طرح اگر مرد کی داڑھی یامونچھوں کے بال یا اس کے ناخن کا کوئی حصہ ٹوٹ کر  گرجائے تو اس کو یہ چیز نقصان نہیں دے گی جب تک اس نے عمداً ایسا نہ کیا ہوکیونکہ منع یہ ہے کہ وہ عمداً احرام کی حالت میں اپنے بال یا ناخن نہ کاٹے اور اسی طرح عورت بھی ان چیزوں کو عمداً نہ کاٹے۔رہی ان چیزوں میں سے وہ  چیز جو بغیر ارادے کے از خود گر جائے تو یہ مردہ بال ہوتے ہیں جو حرکت ملنے سے گر جاتے ہیں،ان کا گرنا محرم کے لیے نقصان دہ نہیں ہے۔(ابن باز  رحمۃ اللہ علیہ )

ھذا ما عندی والله اعلم بالصواب

عورتوں کےلیے صرف

صفحہ نمبر 317

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ