سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(316) رطوبت کے عارضہ کے وجہ سے فجر کے وضو سے چاشت پڑھنا

  • 17923
  • تاریخ اشاعت : 2017-01-30
  • مشاہدات : 238

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

 کیا مذکورہ بالا عوارض میں مبتلا عورت فجر کے وضو سے نماز چاشت پڑھ سکتی ہے؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة الله وبرکاته!

الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

نہیں، یہ صحیح نہیں ہے، کیونکہ نماز چاشت کا اپنا ایک وقت ہے، تو اس کا وقت شروع ہونے پر اسے نیا وضو کرنا ضروری ہے، کیونکہ یہ عورت مستحاضہ کی طرح ہے۔ اور آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے استحاضہ والی عورت کو حکم دیا تھا کہ ہر نماز کے لیے نیا وضو کیا کرے۔

نماز ظہر کا وقت سورج ڈھلنے سے لے کر عصر تک، عصر کا وقت سورج ڈھلنے سے لے کر سورج زرد ہونے تک، اور حسب ضرورت غروب تک ہے، اور مغرب کا وقت سورج غروب ہونے سے لے کر سرخ شفق کے ختم ہونے تک، اور عشاء کا وقت سرخ شفق کے غروب ہونے سے لے کر آدھی رات تک ہے۔

    ھذا ما عندي والله أعلم بالصواب

احکام و مسائل، خواتین کا انسائیکلوپیڈیا

صفحہ نمبر 269

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ