سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(80)مسوڑھوں سے یاپیشاب پائخانہ کےمقام کےعلاوہ خون کےنکلنے سے وضو ٹوٹ جاتا ہے ؟

  • 16061
  • تاریخ اشاعت : 2016-05-10
  • مشاہدات : 265

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

مسوڑھوں سے یاپیشاب پائخانہ کےمقام کےعلاوہ خون کےنکلنے سے وضو ٹوٹ جاتا ہے ؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

مسوڑھوں سے یاپیشاب پائخانہ کےمقام کےعلاوہ خون کےنکلنے سے ،چاہے تھوڑا ہو یازیادہ ،وضو نہیں ٹوٹتا ،اور نہ اس حالت میں نماز پڑھنے میں شرعاً  کوئی قباحت وکراہت ہے۔اس لیے کہ کسی صحیح اورمعتبر حدیث سےپیشاب پائخانہ کےمقام ،جس میں عورت کےآگےکی شرمگاہ بھی داخل ہے کےعلاوہ بدن کےکسی بھی  حصہ سے خون یاقے کےنکلنے سے ،خواہ وہ تھوڑی ہویازیادہ ،وضوکاٹوٹنا ثابت نہیں ۔

  عبیداللہ رحمانی 7؍12؍1978ء(مکتوب بنام محمدفاروق اعظمی)
ھذا ما عندی واللہ اعلم بالصواب

فتاویٰ شیخ الحدیث مبارکپوری

جلد نمبر 1

صفحہ نمبر 183

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ