سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(197) ٖغیر سودی بینک میں رقم رکھنا

  • 15392
  • تاریخ اشاعت : 2016-04-16
  • مشاہدات : 348

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته
آج کل حادثات بہت ہورہے ہیں اوردیت کا اداکرنا بہت مشکل ہوگیا ہے لیکن ہم ساتھیوں نے مل کر کچھ رقوم جمع کی ہیں اورانہیں بطورامانت بنک الراجحی میں رکھ دیا ہے،اس پر کچھ عرصہ بھی گزچکا ہے اور جب سال ہوجاتا ہے توہم اس کی زکوۃ بھی اداکرتے ہیں توسوال یہ ہے کیا اس بینک میں ہم اپنی یہ رقوم رہنے دیں؟

الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!
بنک الراجحی میں ان رقوم کے رکھنے میں کوئی حرج نہیں کیونکہ ہماری معلومات کے مطابق یہ بینک ان رقوم کو سود کے لئے استعمال نہیں کرتا۔
ھذا ما عندی واللہ اعلم بالصواب

مقالات و فتاویٰ

ص321

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ