سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(198) ورلڈ کپ پر شرط لگانا

  • 13956
  • تاریخ اشاعت : 2015-04-15
  • مشاہدات : 371

سوال




السلام عليكم ورحمة الله وبركاته
دو آدمیوں نے آپس میں شرط لگائی ۔ ایک کا کہنا تھاکہ ورلڈ کپ پاکستان جیتے گا،جبکہ دوسرے کا کہنا تھاکہ پاکستان نہیں جیتے گا۔دونوں نے شرط یہ لگائی تھی کہ جو ہارے گا وہ ساری بس کو کھانا کھلائے گا۔ کیا یہ کھانا جائز ہے۔؟

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

دو آدمیوں نے آپس میں شرط لگائی ۔ ایک کا کہنا تھاکہ ورلڈ کپ پاکستان جیتے گا،جبکہ دوسرے کا کہنا تھاکہ پاکستان نہیں جیتے گا۔دونوں نے شرط یہ لگائی تھی کہ جو ہارے گا وہ ساری بس کو کھانا کھلائے گا۔ کیا یہ کھانا جائز ہے۔؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

اس طرح کی شرطیں لگانا حرام اور ناجائز ہیں ،کیونکہ یہ جوا کے زمرے میں آجاتی ہیں، اللہ تعالی نے جوا حرام قرار دیا ہے،لہذا اس میں سے کھانا حرام پر تعاون ہے،اور کھانا حرام ہے۔

ھذا ما عندی واللہ اعلم بالصواب

فتوی کمیٹی

محدث فتوی


ماخذ:مستند کتب فتاویٰ