سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

قرآن و حدیث کو چھوڑ کر تقلید کرنا

  • 12881
  • تاریخ اشاعت : 2014-08-19
  • مشاہدات : 365

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

قرآن  وحدیث  چھو ڑ  کر کسی  کی تقلید  کر نا شر ک  ہے یا نہیں ؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

قرآن و حدیث  کے واضح  احکا م  و مسا ئل   اور ہدا یت کے با لمقابل  کسی امتی  کے قول کو تھا مے  رکھنا وقعی  شر ک  فی الرسا لت ہے ایسے  شخص کی اقتدا ء  سے بھی  بچنا  چا ہیے ۔

ھذا ما عندی واللہ اعلم بالصواب

فتاویٰ ثنائیہ مدنیہ

ج1ص438

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ