سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

مغرب کی نماز کو عشاء تک مؤ خر کرنا

  • 10228
  • تاریخ اشاعت : 2024-04-20
  • مشاہدات : 1052

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

مجھےاور میرے اہل وعیال کو پچاس کلو میٹر دور ایک قریبی شہر میں بعض ضروری اشیاء خریدنے کے لئے جانا پڑتا ہے مغرب کے وقت ہم واپس لوٹتے ہیں اور ٹریفک کے رش اور مغرب کے وقت کی تنگی کے باعث ہم عشاء کی نماز کے وقت پہنچتے ہیں۔یعنی مغرب کاوقت ختم ہونے کے بعد تو کیا شہر کے دور ہونے اور عورتوں کولاحق ہونے والی مشقت کے پیش نظر مغرب کی نماز کو اس حد تک موخر کرنا کہ ہم شہر پہنچ جایئں جائز ہے ؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

مذکورہ حالت میں دفع مشقت کے پیش نظر مغرب کی نماز کو اس حد تک موخر کرنا کہ تم اپنے شہر پہنچ جائو جائز ہے۔اور اگر راستہ میں باآسانی نماز مغرب بروقت ادا کرنا ممکن ہو تو یہ افضل ہے۔

ھذا ما عندی واللہ اعلم بالصواب

فتاویٰ اسلامیہ

ج1ص342

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ