سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

کیا اقامت کہنے والا امامت بھی کرواسکتا ہے؟

  • 10209
  • تاریخ اشاعت : 2024-04-23
  • مشاہدات : 801

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

کیا مؤذن کے لئے یہ جائز ہے۔کہ وہ اقامت کہہ کر نمازیوں کا امام بھی بن جائے؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

ہاں یہ جائز ہے کہ ایک ہی شخص اذان واقامت ہی کہے اور اگر مؤذن دیگر نمازیوں کی نسبت قرآن مجید کا زیادہ عالم ہو تو وہ حاضرین کا امام بھی بن سکتا ہے۔جب مقررہ امام موجود نہ ہو اور وہ مؤذن کو اپنا نائب بناجائے تو اس صورت میں بھی مؤذن امامت کرواسکتا ہے اسی طرح مؤذن کو تنخواہ دار امام کے منصب پر فائز کرنا بھی جائز ہے۔

ھذا ما عندی واللہ اعلم بالصواب

فتاویٰ اسلامیہ

ج1ص334

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ