سرچ انجن کی نوعیت:

تلاش کی نوعیت:

تلاش کی جگہ:

(219) یاد داشت کے لیے اپنی تصویر گھر میں رکھنا

  • 12941
  • تاریخ اشاعت : 2014-08-26
  • مشاہدات : 622

سوال

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

یاد داشت کے لیے اپنی تصویر بناکرگھر رکھنا یاپھر والدین کی؟اور کتابوں کی تصاویر کےبارے میں وضاحت فرمائیں؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

تصویر  خواہ  اپنی ہو یا  والدین  وغیرہ  کی بطو ر  یا د گا ر  اپنے  پا س  رکھنا  حرا م  ہے صحیح  حدیث  میں ہے ۔ رسول اللہ  صلی اللہ علیہ وسلم   نے حضرت علی  بن  ابی  طا لب  رضی اللہ تعالیٰ عنہ   سے فر ما یا  : جو تصویر  یا مجسمہ  دیکھو  اسے مٹا  دو اور جو قبر  اونچی  دیکھو  اسے  برا بر  کردو  اور دوسری  روا یت  میں ہے  آپ  صلی اللہ علیہ وسلم   نے فر ما یا : قیا مت  کے دن  سب  سے سخت  عذاب  مصوروں  کو ہو گا (مسلم)

ھذا ما عندی واللہ اعلم بالصواب

فتاویٰ ثنائیہ مدنیہ

ج1ص533

محدث فتویٰ

ماخذ:مستند کتب فتاویٰ