فتاویٰ جات: متفرقات
فتویٰ نمبر : 8190
نجات یافتہ فرقے کی پہچان
شروع از بتاریخ : 13 November 2013 08:24 AM
السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

آپ نجات یافتہ فرقے کے متعلق کیا فرماتے ہیں ! وہ کون ہیں ؟ ان کا طریقہ کیا ہے؟ اور ان کا علاقہ کون ساہے؟ اگر حدیث نبوی میں یا علماء کے ارشادات میں اس کی کوئی وضاحت موجود ہے تو بیان فرمادیجئے۔


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

نجات یافتہ فرقہ وہی ہے جو اس طریقہ پر قائم ہو جس پر رسول اللہﷺ اور آپ کے صحابہ کرام رضی اللہ عنہم تھے۔ رسول اللہﷺ نے اس کی یہی وضاحت فرمائی ہے۔ ان کا طریقہ، کتاب اللہ‘ سنت رسول اللہﷺ اور وہ علم جس کی بنیاد قرآن وحدیث پر ہو‘ اس پر عمل کرنا ہے۔ وہ کسی شہر کے ساتھ خاص نہیں۔

وَبِاللّٰہِ التَّوْفِیْقُ وَصَلَّی اللّٰہُ عَلٰی نَبِیَّنَا مُحَمَّدٍ وَآلِہ وَصَحْبِہ وَسَلَّمَ

اللجنة الدائمة۔ رکن: عبداللہ بن قعود، عبداللہ بن غدیان، نائب صدر: عبدالرزاق عفیفی، صدر عبدالعزیز بن باز

فتویٰ (۶۸۰۰)

 

 

فتاوی بن باز رحمہ اللہ

جلددوم -صفحہ 155

محدث فتویٰ


تبصرہ (0)
[Notice]: Undefined index: irsloading (cache/c62f257fe6ed43eb557019d638a0d780.php:75)