فتاویٰ جات: متفرقات
فتویٰ نمبر : 8135
کسی مسلمان کو غیر مسلم کہنا
شروع از بتاریخ : 12 November 2013 09:42 AM
السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

مسلمان کو کہنا تو مومن نہں یا تو بے ایمان ہے‘ اس کا کیا حکم ہے؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

ایسا کہنا جائز نہیں بلکہ حرام ہے۔ اس کی دلیل حضرت عبداللہ بن عمر رضی الله عنہما کی حدیث ہے کہ رسول اللہ ﷺ نے ارشاد فرمایا:

(أِذَا قَال الرَّجُلُ لَأَخِیہِ: یَا کَافِرُ فَقَدْ بَائَ بِھَا أَحَدُھُمَا فَأِنْ کَانَ قَالَ وَأِلَّا رَجَعَتْ عَلَیْہِ)

’’جب کوئی شخص اپنے بھائی کو کہتا ہے‘ او کافر! تو یہ لفظ ان میں سے کسی ایک پر صادق آتا ہے۔ اگر (جسے کہاگیا ہے) وہ ایسے ہی ہے جیسا کہ کہا گیا (پھر تو وہ کافر ہے ہی) ورنہ یہ (لفظ) کہنے والے پر لوٹ آتا ہے‘‘ (متفق علیہ)1

2صحیح بخاری حدیث نمبر: ۶۱۰۴۔ جامع ترمذی حدیث نمبر: ۲۶۳۹

حضرت ابوذر رضی الله عنہما سے روایت ہے کہ انہوں نے جناب رسول اللہ ﷺ کو فرماتے ہوے سنا:

’’جو شخص اپنے بھائی کو کفر کے لفظ کے ساتھ بلاتا ہے (اسے کافرکہتاہے) یا کہتا ہے ’’اور اللہ کے دشمن! اور (جسے کہاگیا ہے) وہ ایسا نہیں ہے تو یہ بات کہنے والے پر پلٹ آتی ہے۔ ‘‘ (متفق علیہ)2

وَبِاللّٰہِ التَّوْفِیْقُ وَصَلَّی اللّٰہُ عَلٰی نَبِیَّنَا مُحَمَّدٍ وَآلِہ وَصَحْبِہ وَسَلَّمَ

اللجنة الدائمة۔ رکن: عبداللہ بن قعود، عبداللہ بن غدیان، نائب صدر: عبدالرزاق عفیفی، صدر عبدالعزیز بن باز

فتویٰ (۹۲۳۲)

----------------------------------

2 صحیح بخاری حدیث نمبر: ۱۶۰۴۵۔ صحیح مسلم حدیث نمبر: ۶۱۔ سنن ابی داؤد حدیث نمبر: ۴۶۸۷۔

 

 

فتاوی بن باز رحمہ اللہ

جلددوم -صفحہ 95

محدث فتویٰ


تبصرہ (0)
[Notice]: Undefined index: irsloading (cache/c62f257fe6ed43eb557019d638a0d780.php:75)