فتاویٰ جات: متفرقات
فتویٰ نمبر : 679
(144) حرام چیزوں کاادویات میں استعمال
شروع از عبد الوحید ساجد بتاریخ : 12 May 2012 01:39 PM

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

جوچیزیں حرام ہیں مثلاً شراب ،افیون ،بھنگ وغیرہ ان کودوائی میں استعما ل کرناجائز ہے ؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!

الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد! 

مشکوۃ میں ہے :

«عن ابی درداء قال قال رسول الله صلی الله علیه وسلم ان الله انزل الداء والدواء فتداوواولاتداووابحرام» رواه ابوداؤد (مشکوة باب الطب والرقی ص 380)

            ’’ابودرداء رضی اللہ عنہ سے روایت ہے ۔رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم فرماتے ہیں :خدانے کوئی بیماری نہیں اتاری ہے۔ مگراس کی شفابھی اتاری پس دواءکرو اورحرام کےساتھ دوا نہ کرو۔

اس حدیث سے معلوم ہواکہ کسی حرام شئے کےساتھ دواء  نہ کرنی چاہیے ۔

وباللہ التوفیق

فتاویٰ اہلحدیث

کتاب الطہارت، پانی کا بیان، ج1ص238 

محدث فتویٰ



تبصرہ (0)
[Notice]: Undefined index: irsloading (cache/c62f257fe6ed43eb557019d638a0d780.php:75)