فتاویٰ جات: متفرقات
فتویٰ نمبر : 675
(140) غیرمسلم اورمسلمان کاایک کنوئیں سےپانی بھرنا
شروع از عبد الوحید ساجد بتاریخ : 12 May 2012 01:07 PM

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

کیاایک کنوئیں پرالگ الگ ڈول ڈال کرمسلمان اورہندویاشودرپانی نکال سکتے ہیں۔؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!

الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد! 

غیرمسلم کے برتنوں کےمتعلق حدیث میں آیاہے کہ دھوکراستعما ل کرو۔اس سے معلوم ہواکہ ان کے ساتھ اختلاط جائز نہیں ۔ہاں کنوئیں کاپانی چونکہ کثیرہے اس لیے نجس نہیں ہوتا۔خواہ ان کے برتن کیسے ہی ہوں لیکن طبعی نفرت کااظہارکرتے ہوئے پرہیز ہوسکے توبہترہے ۔

وباللہ التوفیق

فتاویٰ اہلحدیث

کتاب الطہارت’پانی کا بیان، ج1ص236 

محدث فتویٰ 



تبصرہ (0)
[Notice]: Undefined index: irsloading (cache/c62f257fe6ed43eb557019d638a0d780.php:75)