فتاویٰ جات: عبادات
فتویٰ نمبر : 5166
(734) کیایہ وظیفہ قرآن و سنت سے ثابت ہے؟
شروع از بتاریخ : 29 June 2013 10:18 AM
السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

سورۂ کہف کی تشریح میں پڑھا تھا کہ آخری آیات اِنَّ الَّذِیْنَ اٰمَنُوْا… پڑھنے سے صبح جس وقت اُٹھنا چاہیں آنکھ کھل جاتی ہے ۔ اور حقیقتاً یہ وظیفہ کار گر بھی ہوا ہے کیایہ وظیفہ قرآن و سنت سے ثابت ہے؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

امام سیوطی نے فضائل القرآن لابن الضریس کے حوالہ سے در منثور میں لکھا ہے : ((عَنْ إِسْمَاعِیْلَ بْنِ أَبِیْ رَافِعٍ قَالَ: بَلَغَنَا أَنَّ رَسُوْلَ اللّٰہِ صلی الله علیہ وسلم قَالَ: أَلَا أُخْبِرُکُمْ… الحدیث وَفِیْ آخِرِہٖ: وَمَنْ قَرَأَ الْخَمْسَ آیَاتٍ مِنْ خَاتِمَتِھَا حِیْنَ یَأْخُذُ مَضْجَعَہٗ مِنْ فِرَاشِہٖ حُفِظَ ، وَبَعَثَ مِنْ أَٰیِّ اللَّیْلِ شَائَ)) (۴/۲۵۷)مگر یہ اسماعیل بن أبی رافع کی بلاغ ہونے کی بناء پر ثابت نہیں۔

                                                                                                 ۱۳/۱/۱۴۲۴ھ

قرآن وحدیث کی روشنی میں احکام ومسائل

جلد 02 ص 732

محدث فتویٰ


تبصرہ (0)
[Notice]: Undefined index: irsloading (cache/c62f257fe6ed43eb557019d638a0d780.php:75)