فتاویٰ جات
فتویٰ نمبر : 2532
سترہ مستحب ہے
شروع از بتاریخ : 17 February 2013 02:25 PM
السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

مسجد میں نماز پڑھتے وقت نمازی اپنے آگے سترہ رکھے یا نہ ؟ 


 

الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

مرور بین یدی المصلی کے گناہ ہونے کو بیان کرنے والے دلائل میں مسجد یا غیر مسجد کی تخصیص نہیں۔ اسی طرح مصلی کے سامنے سترہ سے قبلہ والی جانب سے گزرنے کے گناہ نہ ہونے کو بیان کرنے والے دلائل میں بھی مسجد یا غیر مسجد کی تخصیص نہیں۔ تو ان دلائل کا تقاضا ہے کہ نمازی مسجد کی قبلہ والی دیوار یا مسجد کے کسی ستون کے قریب ہو کر نماز پڑھے ورنہ کسی چیز کو سترہ بنائے۔

 

فتاوی احکام ومسائل

کتاب الصلاۃ ج 2 ص 176

محدث فتویٰ


تبصرہ (0)
[Notice]: Undefined index: irsloading (cache/c62f257fe6ed43eb557019d638a0d780.php:75)