فتاویٰ جات
فتویٰ نمبر : 2464
(87) مسجد کی انتظامیہ بے نماز اور نمازی کو انتظامی امور میں شریک نہ کرنا
شروع از بتاریخ : 16 February 2013 07:44 AM
السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

اگر مسجد کی انتظامیہ کمیٹی کے کارکن زیادہ تر بے نماز ہوں تو کیا ان کو یہ حق حاصل ہے کہ وہ نمازیوں کو یہ کہہ دیں کہ تم مسجد کے انتظامی امور میں بات کرنے کا حق نہیں رکھتے اور امام کو مجبور نہیں کر سکتے کہ وہ آپ کے مقرر کردہ وقت پر نماز پڑھائے؟

_______________________________________________________________

الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

مسجد کے عمومی انتظام میں تو بے شک عوام کو دخل نہیں دینا چاہیے، مگر اوقات نماز کا تقرر تو انتظامیہ کمیٹی سے تعلق نہیں رکھتا، اس کا تعلق تو امام اور مقتدیوں سے ہے، لہٰذا دونوں کو باہم تصفیہ کر لینا چاہیے اور ایک وقت مقرر کر کے اس کی پابندی کرنی چاہیے اور چھوٹی چھوٹی باتوں پر اختلاف پیدا نہیں کرنا چاہیے۔ (اہل حدیث سوہدرہ جلد نمبر۳ ش نمبر ۱۴)

فتاویٰ علمائے حدیث

کتاب الصلاۃجلد 1 ص 68
محدث فتویٰ


تبصرہ (0)
[Notice]: Undefined index: irsloading (cache/c62f257fe6ed43eb557019d638a0d780.php:75)