فتاویٰ جات: متفرقات
فتویٰ نمبر : 2294
(580) موبائل سےاسلامی میسجز کو ڈیلیٹ کرنے کا حکم
شروع از بتاریخ : 17 December 2012 09:42 AM
السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

آج کل ہم لوگ موبائل کا استعمال بہت زیادہ کرتے ہیں،اگر اس نیت سے کہ کسی کو کچھ فائدہ ہوجائیں موبائل پر اسلامی میسج مثلا" قرآن کی آیات یا حدیث شریف یا کوئی اور اسلامی میسج اگر کسی کو سینڈ کرتے ہیں اور وہ اس میسج کو ڈیلیٹ کریں تو کیا اس میں گناہ ہے؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

ایسا کرنے میں کوئی حرج نہیں ہے، کیونکہ یہ ایک مجبوری ہے ، ورنہ میموری فل ہوجانے پر کوئی نیا میسج نہیں آئے گا ۔ یہ ایسے ہی ہے جیسے آپ موبائل بند کردیں، یا آپ گھر کے کمپیوٹر سے کوئی تلاوت وغیرہ ڈیلیٹ کر دیں یا کمپیوٹر بند کر دیں۔ لیکن یاد رہے کہ ڈیلیٹ کرنے میں نفرت یا بغض شامل نہیں ہونا چاہئے، بلکہ احترام کے پیش نظر یہ امر انجام دینا چاہئے۔

هذا ما عندي والله اعلم بالصواب

فتاویٰ علمائے حدیث

کتاب الصلاۃجلد 1


تبصرہ (0)
[Notice]: Undefined index: irsloading (cache/c62f257fe6ed43eb557019d638a0d780.php:75)