فتاویٰ جات: عمرہ اور حج
فتویٰ نمبر : 1902
ذوالحجہ میں تکبیرات کہنا
شروع از عبد الوحید ساجد بتاریخ : 29 August 2012 11:01 AM
السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

ذوالحج کے مہینہ میں آدمی کب تکبیرات کہنی شروع کرے؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!

الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

ذوالحجہ کا چاند طلوع ہونے کے بعد یکم ہی سے مزید ذکر اذکار اور مزید نیکی کے کام شروع کر دینے چاہئیں صحیح بخاری میں ہے رسول اللہﷺنے فرمایا :

«مَا الْعَمَلُ فِیْ اَيَّامٍ أَفْضَلُ مِنْهَا فِیْ هٰذِهِ قَالُوْا : وَلاَ الْجِهَادُ ؟ قَالَ: وَلاَ الْجِهَادُ اِلاَّ رَجُلٌ خَرَجَ يُخَاطِرُ بِنَفْسِهِ وَمَالِه فَلَمْ يَرْجِعْ بِشَيْئٍ»بخارى-كتاب العيدين-باب فضل العمل فى ايام التشريق

’’ذوالحجہ کے (۱۰) دس دنوں میں نیکی کرنا بنسبت دوسرے دنوں میں نیکی کرنے سے اللہ کو زیادہ محبوب ہے‘‘

وباللہ التوفیق

احکام و مسائل

حج و عمرہ کے مسائل ج1ص 290

محدث فتویٰ


تبصرہ (0)
[Notice]: Undefined index: irsloading (cache/c62f257fe6ed43eb557019d638a0d780.php:75)