فتاویٰ جات: متفرقات
فتویٰ نمبر : 18065
(220) بغیر بیعت امام موت آئے تو جاہلیت کی موت؟
شروع از عبد الوحید ساجد بتاریخ : 21 December 2016 12:42 PM
السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

صحیح مسلم کی حدیث میں ہے کہ بغیر بیعت امام کےجوموت آئے وہ جاہلیت کی موت ہے۔اس امام سےکون سا امام مراد ہے؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة الله وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

اس امام سےمراد وہ شخص ہے جوصاحب حکومت ہو اجرائے حدووشرعیہ کی قوت رکھتا ہومسلمانوں کی ملکی سیاسی ومذہبی امور کاذمہ دار ہو اورغیر مسلم حکومت کامحکوم وتابع نہ ہو ۔ارشاد ہے  انما الامام جنة يقاتل من وارءه ويتقى به

 ھذا ما عندی والله اعلم بالصواب

فتاویٰ شیخ الحدیث مبارکپوری

جلد نمبر 2۔کتاب الإمارة

صفحہ نمبر 424

محدث فتویٰ


تبصرہ (0)
[Notice]: Undefined index: irsloading (cache/c62f257fe6ed43eb557019d638a0d780.php:75)