فتاویٰ جات: متفرقات
فتویٰ نمبر : 14072
(236) شب براءت کی حقیقت
شروع از عبد الوحید ساجد بتاریخ : 19 May 2015 11:53 AM
السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

شب براءت منانے کی کیا حقیقت ہے،کیا یہ صحابہ کرام کے زمانے میں تھی۔؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

شب براءت منانا شرعا بدعت ہے۔جس کی شریعت میں کوئی دلیل موجود نہیں ہے اور نہ ہی یہ صحابہ کرام کے زمانے میں منائی جاتی تھی۔تفصیلات جاننے کے لئے آپ ہماری سائٹ پر موجود درج ذیل کتب کا مطالعہ فرمائیں۔

شب براءت کی حقیقت

شب برات اور اس کی شرعی حیثیت

ھذا ما عندی واللہ اعلم بالصواب

فتوی کمیٹی

محدث فتوی



تبصرہ (0)
[Notice]: Undefined index: irsloading (cache/c62f257fe6ed43eb557019d638a0d780.php:75)