فتاویٰ جات: متفرقات
فتویٰ نمبر : 13363
(543) درود شریف کی بے ادبی
شروع از عبد الوحید ساجد بتاریخ : 20 September 2014 02:55 PM
السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

اگر درود شریف کی بے ادبی  ہو جا ئے تو اس کا کیا  حل  ہے ؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

اگر درود شریف  کی بے ادبی کا سوال  غیر واضح  ہے اگر مقصود  بلا وضو  پڑھنا  ہے تو یہ جا ئز  ہے اور اگر  مقصود  یہ ہے  کہ محل نجا ست  وغیرہ  پر پڑھا گیا  تو اس صورت میں اللہ تعا لیٰ  سے معا فی  مانگنی  چا ہیے صحیح بخا ری  میں قصہ افک کے ضمن میں مذکو رہے کہ ۔

«فان العبد اذا اعترف بذنب ثم تاب تاب اللہ عليه»

"انسان  جب اپنے گناہ کا اعتراف کر ے پھر تو بہ کر ے  تو اللہ  تعا لیٰ اس کی تو بہ قبول فرماتے  ہیں ۔"

ھذا ما عندی واللہ اعلم بالصواب

فتاویٰ ثنائیہ مدنیہ

ج1ص823

محدث فتویٰ


تبصرہ (0)
[Notice]: Undefined index: irsloading (cache/c62f257fe6ed43eb557019d638a0d780.php:75)