فتاویٰ جات: تعلیم وتعلم
فتویٰ نمبر : 12881
شرعی مسئلہ اور فتوی جاری کرنے میں فرق
شروع از عبد الوحید ساجد بتاریخ : 16 August 2014 11:19 AM
السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

شر عی مسئلہ  کی وضا حت  کر نے  میں  اور فتو ی  جا ری  کر نے  میں کیا فر ق ہے ؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

مسئلہ  کی وضا حت  کر نا عا م ہے  چا ہے سا ئل  کے جوا ب  میں ہو یا ویسے  ہی کتا ب  وسنت  سے لو گوں  کی حا جا ت  و ضروریا ت  کے پیش نظر  کسی شے  کو کھو ل  کر بیا ن  کر دیا جا ئے  اور سا ئل  کی پیش  آمدہ مشکل  حل  کر نے  کا نا م  فتو یٰ  ہے چنا نچہ  حا فظہ  ابن حجر  رحمۃ اللہ علیہ   فر ما تے ہیں :

(اي جواب السوال عن حادثة التي تشكل علي السائل)(فتح البا ر ی :265/8)
ھذا ما عندی واللہ اعلم بالصواب

فتاویٰ ثنائیہ مدنیہ

ج1ص256

محدث فتویٰ


تبصرہ (0)
[Notice]: Undefined index: irsloading (cache/c62f257fe6ed43eb557019d638a0d780.php:75)