فتاویٰ جات: متفرقات
فتویٰ نمبر : 12836
(39) اسلام بزور شمشیر پھیلایا امن واخلاق سے؟
شروع از عبد الوحید ساجد بتاریخ : 12 August 2014 10:48 AM
السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

اسلام بزور شمشیر پھیلایا امن واخلاق سے؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

واقعات اس بات پر شاہد ہیں کہ حسب ضرورت اسلام کی اشاعت دونوں طرح ہوئی ہیں لیکن بزور شمشیر کا مفہوم صرف یہ ہے کہ لڑایئاں بہت سارے لوگوں کی ہدایت کا سبب بنیں لیکن زبردستی کسی کو مسلمان نہیں بنایاگیا۔ کچھ کفار ایسے بھی تھے جو مسلمان نہیں ہوئے لیکن جزیہ ادا کرتے رہے ظاہر ہے کہ اسلامی  جنگوں سے مقصد کلمۃ اللہ کی سربلندی تھا اور وہ ہر دو صورت میں حاصل ہے۔

ھذا ما عندی واللہ اعلم بالصواب

فتاویٰ ثنائیہ مدنیہ

ج1ص218

محدث فتویٰ


تبصرہ (0)
[Notice]: Undefined index: irsloading (cache/c62f257fe6ed43eb557019d638a0d780.php:75)