فتاویٰ جات: متفرقات
فتویٰ نمبر : 11015
(566) کراٹے وغیرہ میں جھک کر سلام کرنا جائز نہین خواہ صرف سرہی کو جھکایا جائے
شروع از عبد الوحید ساجد بتاریخ : 06 April 2014 01:13 PM
السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

کچھ لوک امریکہ کی کرا ٹے کی محفلوں میں سے ایک محفل میں شریک ہو ئے تو ٹریننگ دینے والے نے کہا کہ جب تمہا رے سامنے جھکا جا ئے تو تم بر واجب ہے کہ تم بھی جھکو لیکن ہم نے اسے مستر د کردیا اور اپنے وین کے خوالہ سے   اس کی وضا حت کی تو اس نے ہم سے اتفا ق کیا اور کہا کہ آپ صرف سر جھکا دیا کریں کیو نکہ جھکنے کا آغا ز تو اس نے کیا ہے لہذا ضروری ہے کہ آ پ اس کے سلام کا جواب دیں اور اس کے با رے میں کیا حکم ہے ؟


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

کسی بھی مسلمان یا کا فر کے سامنے بو قت سلام جھکنا جا ئز نہیں نہ جسم کے با لا ئی حصہ کے سا تھ اورنہ صرف سر کے سا تھ کیونکہ جھکنا تو عبا دت ہے اور عبا دت صرف اللہ وحدہ لاشریک لہ کی ذات گرمی کے لیے خا ص ہے ۔

ھذا ما عندی واللہ اعلم بالصواب

فتاویٰ اسلامیہ

ج4ص428

محدث فتویٰ


تبصرہ (0)
[Notice]: Undefined index: irsloading (cache/c62f257fe6ed43eb557019d638a0d780.php:75)