فتاویٰ جات: متفرقات
فتویٰ نمبر : 11014
(565) سلام کے بعد دست بوسی اور ہاتھ کو سینے پر رکھنا
شروع از عبد الوحید ساجد بتاریخ : 06 April 2014 01:11 PM
السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

میں نے دیکھا ہے کہ بعض اوگ مصا فحہ کے بعد دست بوسی بھی کرتے ہیں یا اپنے ہا تھون کو اپنے سینوں پر رکھ لیتے ہیں تا کہ محبت کا زیا دہ اظہا ر کر سکیں تو کیا یہ جا ئز ہے ؟راہنما ئی فرمائیں۔


الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال

وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

ہمارے عام کی حد تک شریعت میں اس عمل کی کوئی دلیل نہیں ۔ یہ قطعا شریعت کا حکم نہیں کہ مصا فحہ کے بعد ہا تھ کو بو سہ دیا جا ئے یا اسے اپنے سینہ بر رکھا جا ئے اور اگر ایسا کرنے والے اسے تقرب الی اللہ کا ذریعہ سمجھیں تو یہ بد عت ہے ۔

ھذا ما عندی واللہ اعلم بالصواب

فتاویٰ اسلامیہ

ج4ص428

محدث فتویٰ


تبصرہ (0)
[Notice]: Undefined index: irsloading (cache/c62f257fe6ed43eb557019d638a0d780.php:75)